پب جی اور نو جو ا ن نسل

  پب جی کیا ہے؟PlayerUnknown's Battlegrounds
یہ ایک ایسی اصطلاح ہے جس سے سبھی آگا ہ ہیں۔ یہ گیم میدان جنگ کی مختصر شکل ہے۔ بنیادی طور پر، یہ ایک ویڈیو گیم ہے جو  پوری دنیا میں بہت مشہور ہے۔ تاہم، تفریحی عنصر کا مطلب یہ نہیں ہے کہ یہ سب سے اچھا ہے۔ کھیل وائرل ہوچکا ہے اور اربوں لوگ ا سے کھیلتے ہیں۔''پب جی''دورِحا ضرہ میں سب سے زیادہ کھیلا جانے والا، لڑائی پر مشتمل  ایک کھیل ہے۔ نوجوان نسل ہر دن اسے کھیل رہی ہے۔ ہر ایک اسے کھیلنا پسند کرتا ہے۔نیز یہ کہ اس کی جا نب ر جحان بڑ ھتا ہی چلا جا رہا ہے۔مو جو دہ حا لات میں اگر کو ئی نہیں جانتا کہ پب جی کیا ہے؟ تو یو ں سمجھا جا تا ہے یا ایسے خیا ل کیا جا تا ہے گو کہ آپ اس کرہ ارض پر ہے ہی نہیں۔ یہ ایک ملٹی پلیئر آن لائن گیم ہے جو سولو یا ٹیم سا تھ کھیلا جا تا ہے اور جو ایک وقت میں 100 کھلاڑیوں کو گھرنما جگہ میں لے جاتا ہے جہاں انہیں ہتھیاروں،طبی سامان اور دیگر وسائل کے لئے کوشش کرنی پڑتی ہے۔ یہ جا ننے کی ضرورت ہے کہ پب جی حقیقی زندگی میں کس طرح متاثر کرتی ہے؟پب جی گیم کی بدو لت نو جو ا نوں کے کیریئر پر،صحت پر، ان کی تعلیم پراور زندگی پر اچھے اثرات یا مضر اثرات  کیسے ہوتے ہیں؟ کیا پب جی کو کھیلنے کے بھی فوائد ہوسکتے ہیں؟ اس کا اثر ہمارے دماغ پر مثبت یا منفی انداز میں کیسے پڑتا ہے؟ محققین کے مطا بق اس گیم کے اثرات کھلاڑیوں پر پڑتے ہیں اور  یہ 
 ا ثرا ت دونوں طر ح کے ہو تے ہیں مثبت بھی اور منفی بھی۔
پب جی کے مثبت ا ثرا ت 
ایک ڈا کڑ نے بتا یا کہ میرا ایک مریض اپنی پوری زندگی میں centipede سے جس کو کنکھجو را کہتے  ہیں اس سے خوفزدہ تھا۔ پھر، اس نے پب جی کھیلنا شروع کردی۔ کچھ دن بعد، اس نے باتھ روم میں ایک سینٹی پیڈ دیکھا۔  اب کی د فعہ وہ با لکل بھی خوفزدہ نہیں تھا۔اس  نے فورا ہی ایکشن لیا اور اس کنکھجو ر ے کو باہر پھینک دیا۔مطلب کہ یہ گیم خو ف کو ختم کر تا ہے،نڈر اور بہا در بنا تا ہے۔ کسی بھی منفی خیالات سے نجات پانے کے لئے یہ کھیل سب سے بہتر ہے۔ ایک  پب جی  پلیئر نے  بتا یا کہ اس کا  بریک اپ  ہو گیا اور وہ خودکشی کر نے کے در پے تھا، اور پھر پب جی اس کی زندگی میں معجزے کی طرح آگئی۔ وہ کچھ دن اس کھیل میں مصروف رہا۔ اور آہستہ آہستہ، وہ ز ند گی میں آگے بڑھ گیا۔اور آج ایک کامیاب انسان بن چکا ہے۔ ایک شخص نے کہا تھا کہ پب جی نے حقیقی زندگی میں میرے خیال کو تبدیل کیا۔ میں اب ایک بہتر ملازم بن گیا ہوں کیوں کہ پہلے میں عجیب سی کشمکش میں تھا۔میں ایک د فتر میں Receptionistکے طور پر کام کرتا تھا۔میر ا مالک مجھ سے نا خو ش تھا۔لیکن ا پنا کا م ڈ ھنگ سے نہیں کر پا رہا تھا۔ پھر میں نے پب جی کھیلنا شر و ع کی تو جیسے اس نے میرے دماغ میں کام کرنے کے صلا حیت کو ہی بڑھا دیا۔ اس نے کہا میں جانتا ہوں کہ یہ سننے میں عجیب سا لگتا ہے لیکن یہ حقیقت ہے کہ پب جی کی بد و لت اب میں ا پنا کا م بخو بی ا نجام دے رہا ہوں اور میرامالک بھی مجھ سے خو ش ہے۔لیکن یہ بھی سچ ہے کہ یہ گیم واقعی ایک نشے کی طرح ہے۔ یہ بھی کہا جا تا ہے کہ  پب جی کھیلنے و ا لے کھلاڑیوں کا IQ  ان  سے بہت بہتر ہے جو کھیل نہیں کھیلتے ہیں۔اس کھیل سے سوچنے کی صلاحیتوں میں 
  اضا فہ ہو تا ہے۔ کیو نکہ اس کھیل میں کھلا ڑی نے بہت سارے فیصلے لینے ہو تے ہیں اور فوری طور پر اس کے نتائج بھی ملتے ہیں۔  اسی فیصلے سے کھلا ڑی سبق حاصل کرتے ہیں اور بہتر سوچنے کی کوشش کرتے ہیں۔ اس کھیل میں 100 کھلاڑی ہیں اور آپ سب کے ساتھ بات چیت کر سکتے ہیں اور دوست بنا سکتے ہیں۔ا سطر ح یہ کھیل نئے دوست بنا نے میں معا ون ثا بت ہو تا ہے۔
پب جی کے منفی اثرات 
 پب جی کے بارے میں یہ کہا جا تا ہے کہ زیادہ پرْ تشدد کھیل ہے اور یہ گیم کھیلنے والے بچوں میں جارحانہ خیالات، جذبات اور طرزِ عمل پیدا  کر تاہے۔لوگ ویڈیو گیمنگ کے عادی ہوجا تے ہیں۔ ڈبلیو ایچ او نے یعنی World Health Organization  نے2018 میں گیمنگ کی لت کو دماغی صحت کی خرابی کا باعث قرار دیا تھا۔ ویڈیو گیمز کی لت افسردگی اور اضطراب کی سطح کو بڑھاتی ہے۔اس کے عادی افراد معاشرتی فوبیا کا شکا ر ہو جا تے ہیں۔ بہت زیادہ گیم کھیلنا ا نسان کو معاشرتی طور پر الگ تھلگ کر د یتا ہے۔ اس کے علاوہ دوسری سرگرمیوں جیسے کم پڑھنا، کھیل کود، کنبہ اور دوستوں کے ساتھ بات چیت کرنے اور کبھی کبھی اپنے کیریئر پر بھی توجہ نہ دینے جیسے ا ثر ا ت د یکھنے کو ملتے ہیں۔مزید یہ معیارِ زندگی کو متاثر کرتی ہے۔ لیکن پب جی کے با ر ے میں ہر کسی کا تجر بہ مختلف ہے۔ ا یک بپ جی پلیئر نے  اسی مضمون پر ایک اور انداز میں تبصرہ کیا۔ اس نے کہامیں نے بھی کچھ دن یہ کھیل کھیلا تھا۔ اور میرا ذاتی تجربہ ہے کہ پب جی ایک بہت ہی لت لگا  د ینے و ا لی کھیل ہے۔ یہ کھیلتے ہوئے آپ کو نیند نہیں آتی۔ آپ پب جی پر بہت زیادہ وقت ضائع کرتے ہیں۔ جب میں نے ضرورت سے زیادہ کھیلنا شروع کیا تو مجھے بھی ایک قسم کی سختی کا سامنا کرنا پڑا۔ لیکن، بعد میں اس کا حل ہوگیا۔اور دوسروں کے تجر با ت کے بارے میں،میں نہیں جانتا، لیکن مجھے  یہ کھیل ا چھا لگا ہے۔لیکن میں یہ تجویز کرتا ہوں کہ میدان جنگ کے اس کھیل کو اپنی لت نہ بنائیں۔ آپ اپنے ہی سخت فیصلوں سے  PUBG کے ان اثرات سے محفو ظ رہ سکتے ہیں۔
پب جی ا یک لت
تفریحی کھیل کے طور پر جو کچھ شروع ہوا وہ اب ایک لت میں تبدیل ہو گیا ہے۔ اس سے کھلاڑیوں کی زندگیاں برْی طرح متاثر ہورہی ہیں۔ اور اس کے نتیجے میں مختلف جرائم بھی ہو رہے ہیں۔ مثال کے طور پر، ایک لڑکے نے PUBG موبائل گیم کی لت کی وجہ سے خود کو ہلاک کردیا۔یہ کھیل ایک شخص کی تعلیم کے ساتھ بہت مداخلت کرتا ہے۔ جن طلبا کو تعلیم حاصل کرنی چاہئے وہ اس کھیل میں اپنا وقت ضائع کرتے ہیں۔پب جی نے بہت مقبولیت حاصل کی ہے۔ تاہم، کچھ ایسے بھی ہیں جو اس کھیل کے عادی ہیں اسی وجہ سے یہ کھیل بہت سے لوگوں کے لئے ایک بڑی پریشانی بن گیا ہے۔ PUBG ایک زبردست کھیل ہے لیکن اس کی لت لگنے سے بعض دماغی اور جسمانی صحت کے مسائل پیدا ہوسکتے ہیں جس کے بارے میں آپ خود بھی واقف نہیں۔ اس لت کی وجہ سے،  اپنے فرائض کو پورا نہیں کرتے ہیں۔مزید یہ کہ پب جی موبائل گیم کی لت لوگوں کے رشتے کو خراب کرتی ہے۔ یہاں تک کہ اس کھیل کے سبب گھر ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو جا تے ہیں اورطلاق کے معاملات بھی ہوئے ہیں۔ لوگ اپنا سارا وقت اپنے کنبہ اور دوستوں کے ساتھ گزارنے کے بجائے اس کھیل میں گزارتے ہیں۔ اسی طرح، اس کے نتیجے میں قتل اور خودکشی کے بے شمار جرائم بھی ہوئے ہیں۔مزید یہ گیم موبائل فون پر مو جو د ہو نے کی و جہ سے 
 جنگل کی آگ کی طرح پھیل چکی ہے۔ اس کھیل کا جنون ہر عمر کے گروپوں میں پھیل گیا۔پب جی موبائل گیم بہت نقصان دہ ہے۔ یہ ذاتی تعلقات کے مابین رکاوٹ پیدا کرتا ہے۔ مزید یہ کہ یہ شخص کی پیشہ ورانہ زندگی میں بھی رکاوٹ ہے۔ اس طرح، نوجوان نہ صرف اس کھیل کو کھیلنے کے لئے اپنا وقت ضائع کرتے ہیں بلکہ اپنی تعلیم کو نظرانداز کرتے ہیں۔ ایسا اس لئے ہے کہ یہ PUBG موبائل گیم لت ان کے دماغ کی سرگرمی کو کم کرتی ہے۔ چیزوں کو سمجھنے اور توجہ مرکوز کرنے کی ان کی صلاحیت کم ہوتی ہے۔ یہاں تک کہ تحقیق سے پتہ چلتا ہے کہ PUBG کھلاڑیوں کی تعلیمی کارکردگی بڑے پیمانے پر گرِ رہی ہے۔۔ اس گیم میں پلیئر کو ا تنا لطف آتا ہے کہ وہ کسی چیز سے واقف ہی نہیں ہوتے ہیں۔اور یہیں سے مسئلہ بڑھنا شروع ہوتا ہے۔ ایک شخص اپنی بھوک، پیاس، نیند، مطالعات یا کسی اور چیز سے آگاہ نہیں ہوتا ہے جس سے اس کی زندگی متاثر ہوتی ہے۔ والدین کے ساتھ تعلقات آہستہ آہستہ خراب ہوتے ہیں۔ ذاتی زندگی خراب ہوجاتی ہے۔ کھلاڑی اپنی ذاتی زندگی میں بھی لاپرواہ ہوجاتا ہے۔ اس کے علاوہ، دیررات تک جاگنے کی وجہ سے جوانی میں ہی بیما ر ہو جا تے ہیں۔ جس کی وجہ سے نظر کی کمزوری، بلڈ پریشر اور ذیابیطس میں بھی اضافہ ہو رہا ہے۔ کھانے پینے اور نیند کی عادتوں میں بدلاؤ کی وجہ سے کئی بار بچوں کی جسمانی نشوونما بھی متاثر ہوتی ہے۔ مناسب نیند نہ آنے کی وجہ سے دماغ کو نقصان پہنچتا ہے، جس کی وجہ سے میموری کی کمزوری،  مطالعے میں رکاوٹ، دانشورانہ نشوونما میں رکاوٹ جیسے مسا ئل د یکھنے میں ملتے ہیں۔۔آپ اپنے ہی سخت فیصلوں سے PUBG کے ان اثرات سے محفو ظ رہ سکتے ہیں 
 اس لت کو کیسے کنٹرول کریں؟
ا نگر یزی میں ا یک جملہ بو لا جا تا ہے  Excess of everything is bad مطلب کے ہر چیز کی ز یا دتی نقصان دہ ہے اورہم سب اس سے  بخو بی آگاہ بھی ہیں پھر وہ ویڈیو گیم ہو یا کوئی اور چیز۔ تاہم،  ہرکسی کو یہ بھی جان لینا چاہئے کہ ہم مناسب اقدامات سے کسی بھی قسم کی لت پر قابو پاسکتے ہیں۔ سب سے پہلے  تو اس کھیل پر خرچ کرنے والے وقت کو کم کرنے کی کوشش کریں۔یہ حقیقت ہے کہ اچانک اسے چھوڑ نا مشکل ہے لہذا ایک وقت مقرر کر لیں اور اس مخصوص و قت میں یہ گیم کھیلنے کی کوشش کریں۔اس لت پر قابو پانے کے اوربہت سارے طریقے ہیں۔۔ اپنے ذہن کو کھیل سے ہٹانے کے لئے دوستوں اور خا ند ا ن کے ساتھ وقت گز ا رنے کی کوشش کریں ہمیشہ گھر میں مت رہو۔ باہر جاکر جسمانی سرگرمیوں میں ملوث ہوں جیسے ورزش وغیرہ۔ جب آپ کے پاس دوسرے کام کرنے کوہوں گے، تو آپ کا دماغ کھیل کی طرف نہیں جائے گا۔ لہذا، اپنے دوستوں سے ملیں اور دوسرے مشغلے اپنائیں۔مزید یہ کہ فون کا ا ستعمال کر نے سے
 گر یز کر یں۔ اپنے بہن بھا یؤں کے ساتھ وقت گزارنے کی کوشش کریں۔ جب آپ اپنے پیاروں کے سا تھ بیٹھنا شر و ع کر د یں گے آپ کو کسی اور چیز کی پرواہ نہیں ہوگی۔ لہذا، PUBG کھیلنے کے بجائے اپنے وقت کو احتیاط سے استعمال کریں۔و قت کی قد ر کر نا سیکھیے۔PubGصرف ایک ایپ ہے، آپ اسے اپنے کنٹرول میں رکھیں، اسے اپنی زندگی پر قابو نہ رکھنے دیں۔

میر ا نو جو ا ن کی حیثیت سے کردارکیا ہے؟
 ایک نوجوان کی حیثیت سے جہاں بھی ہم ر ہتے ہیں اس کی بہتر ی کے لئے کام کر نا ہما را فر ض ہے۔ اپنی قوم اور معاشرے کے لئے فرائض اور ذمہ داریاں صرف کسی ا یک نو جوان کی ہی نہیں، بلکہ تمام نوجوانوں کی ہیں۔حکو متِ پا کستان نے بھی پب جی کے نقصا نا ت کے پیشِ اب نظراس گیم کو بین کر دیا ہے۔  اس لئے نو جو ا نوں کو  پب جی چھو ڑ کرا پنی تو جہ ا پنے بہتر مستقبل پر مر کو ز کر نی ہو گی۔نوجوانوں کو ایک اور ذمہ داری اٹھانا ہوگی جو ہماری ثقافت کو زندہ ر کھے۔ اگر ہم اپنی ثقافت سے الگ ہوجائیں تو اس کے نتیجے میں،ہم معاشرے کو تر قی اور
 تبد یلی کی طرف نہیں لا پا ئیں گے۔کیو نکہ ہما ر ی ثقا فت ہما ری جٹر یں ہیں اور و ہی در خت پھل لا تے ہیں جو ا پنی جٹر وں سے منسلک ہو تے ہیں۔ لہذا، نوجوان نسل کو مستقبل کی خاطر معاشرے کی بہتری کے لئے مل کر کام کر نا ہو گا۔ جب تمام نوجوان مل کر کام کریں گے، تو وہ قوم کو کامیابی کی ضمانت دے سکتے ہیں۔

Add new comment

18 + 1 =