لاہور میں توہینِ رسالت کے الزام میں اشفاق مسیح کو سزائے موت سنا دی گئی۔

پاکستان کے شہر لاہور میں ایک اور مسیحی کو توہینِ رسالت کے الزام میں گرفتاری کے بعد جیل بھیج دیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق گرین ٹاؤن کے رہائشی اشفاق مسیح کو باگریان کی علاقے میں واقع ان کی سائیکل مرمت کرنے والی دکان سے گرفتار کیا گیا۔
لاہور میں گرین ٹاؤن پولیس کے مطابق اشفاق ایک سائیکل مکینک ہیں اور ان کے مالک کی درخواست پر ان کے خلاف قانونِ رسالت کے قانون کے تحت 295 سی کا مقدمہ درج کر لیا گیا۔
اشفاق مسیح کو پانچ سال قید میں رکھنے کے بعد لاہور کی ایک سیشن کورٹ کی طرف سے سزائے موت  سْنا دی گئی ہے۔

Add new comment

11 + 1 =