سینٹ جارج چرچ دراصل براعظم ایشیاء کا سب سے بڑا گرجا گھر

سینٹ جارج سائرو،  مالبار فورن چرچ، جسے مقامی طور پر ایڈیپلی چرچ کہا جاتا ہے، ہندوستان کے  شہر، اڈ اپیلی، کوچے میں واقع کیتھولک گھرجا گھر ہے۔ سینٹ جارج چرچ دراصل براعظم ایشیاء کا سب سے بڑا گرجا گھر ہے۔ اور ہر سال دنیا بھر سے تقریبا پچاس لاکھ لوگ یہاں دعا کرنے اور اس کی زیارت کرنے آتے ہیں۔خیال کیا جاتا ہے کہ اس چرچ کی بنیاد 593 عیسویٰ میں رکھی گئی تھی۔ اسے کیرالہ کے قدیم ترین گرجا گھروں میں سے ایک کے طور پر سمجھا جاتا ہے جو کہ تھامس رسول نے پہلی صدی عیسوی میں قائم ہونے والے سات گرجا گھروں کے بعد آتا ہے۔یہ چرچ اپنے دلکش ڈیزائن اور خوبصورتی کی وجہ سے دنیا بھر کے مومنین کے لئے اب ایک زیارت گاہ بن چکا ہے۔ مورخین کے مطابق، تھامس رسول نے سات گرجا گھر بنائے تھے۔ ان سات  گھرجا گھروں کی تعمیر کے فورا بعد ہی اس چرچ کو چھٹی صدی کے دوران تعمیر کیا گیا تھا۔اس چرچ کی بانی کی 1400 سالہ  برسی 18 جنوری 1994 کو منائی گئی۔ مدر ٹریسا آف کلکتہ نے بطور مہمان خصوصی اس پروگرام میں شرکت فرمائی۔ اس موقع کو یادگار بنانے کے لئے، چرچ کے احاطے میں بیل ٹاور تعمیر کیا گیا تھا اور ایک گھنٹی لگائی گئی تھی۔ اس گھنٹی کو بعد میں نئے چرچ کے مرکزی دروازے میں منتقل کیا گیا۔پوپ جان پال دوم نے مبارک تیسرے چرچ کا سنگ بنیاد،1 جنوری 2001 کو رکھا۔ یہ چرچ  88000 مربع فٹ رقبے پر محیط ہے، اور یہ ہندوستان  اور ایشیاء کے سب سے بڑے گرجا گھروں میں سے ایک ہے۔اس چرچ کے صحن میں ایک کنواں ہے یہاں آنے والے عقیدت مندوں کا خیال ہے کہ اس کے پانی میں شفاء یاب کرنے کی قدرتی طاقت ہے۔

Add new comment

5 + 2 =